طنبورا

( طَنْبُورا )
{ طَم + بُو + را }
( عربی )

تفصیلات


عربی زبان میں ثلاثی مجرد کے باب سے مشتق اسم ہے۔ اردو زبان میں بطور اسم استعمال ہوتا ہے۔ ١٦١١ء کو "کلیاتِ قلی قطب شاہ" میں تحریراً مستعمل ملتا ہے۔

اسم نکرہ ( مذکر - واحد )
واحد غیر ندائی   : طَنْبُورے [طَم + بُو + رے]
جمع   : طَنْبُورے [طَم + بُو + رے]
جمع غیر ندائی   : طَنْبُوروں [طَم + بُو + روں (و مجہول)]
١ - طنبور، تنبور، ایک ساز۔
"ڈھول اور طنبورہ، دھات اور سرکنڈے کے بنے ہوئے الغوزے بھی بجائے جاتے تھے۔"      ( ١٩٨٦ء، دنیا کا قدیم ترین ادب، ٦٣:١ )
  • A small kind of tambur