موت ابیض

( مَوتِ اَبْیَض )
{ مَو (و لین) + تے + اَب + یَض }
( عربی )

تفصیلات


اسم کیفیت
١ - بھوک، نیند اور پیاس پر قابو پا لینا، (تصوف) صوفیہ حضرت کے نزدیک بھوک کو کہتے ہیں کیونکہ بھوک سے باطن اور قلب مومن کا منور ہوتا ہے تو جب سالک شکم کو ہمیشہ خالی رکھے گا تو وہ موتِ ابیض سے مر جاوے گا یعنی اس کا قلب منور ہو جائے گا اور اس وقت زندگی حاصل ہو جاوے گی یعنی اس کی فطانت اور دانائی زیادہ ہو جاوے گی کیونکہ جس کا شکم ہمیشہ بھرا رہتا ہے اس کی فطانت اور دانائی کم ہو جاتی ہے (مصباح التعرف)۔