نظریۂ تحرک

( نَظَرِیَّۂِ تَحَرُّک )
{ نَظَریْ + یَہ + اے + تَحَر + رُک }
( عربی )

تفصیلات


اسم نکرہ
١ - (طبیعیات) یہ نظریہ کہ مادے کے نہایت باریک اجزا مستقل حرکت میں رہتے ہیں اور اس مادے کی حرارت ان اجزا کی حرکت کے مطابق ہوتی ہے، اگر حرکت بڑھی ہوئی ہے تو حرارت بھی اتنی ہی زیادہ ہو گی۔